Tuesday, November 20, 2018
Home > بین الاقوامی > ڈونلڈ ٹرمپ نے ڈسٹرکٹ جج میری لینڈ کا فیصلہ فورتھ سرکٹ کورٹ میں چیلنج کردیا ہے

ڈونلڈ ٹرمپ نے ڈسٹرکٹ جج میری لینڈ کا فیصلہ فورتھ سرکٹ کورٹ میں چیلنج کردیا ہے

 نیوزڈیسک(آوازپوائنٹ):خبر رساں ایجنسی کے مطابق امریکی حکومت نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ہدایت پر ترمیم شدہ صدارتی حکم نامے کے خلاف ڈسٹرکٹ جج میری لینڈ کا فیصلہ فورتھ سرکٹ کورٹ میں چیلنج کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق  پچھلے صدارتی حکم نامے میں سے عراق کا نام نکالنے کے بعد یہ نیا اور ترمیم شدہ حکم نامہ پیر کے روز جاری کیا گیا تھا جس میں 6 مسلم ممالک پر 90 دن کی سفری پابندیوں کے علاوہ پناہ گزینوں کی امریکا آمد پر بھی 120 دن کی پابندی عائد کی گئی تھی۔

نئے صدارتی حکم نامے کے خلاف امریکا میں انسانی حقوق کی تنظیموں نے میری لینڈ اور ہوائی کی مقامی عدالتوں میں مقدمات دائر کر دیئے تھے جبکہ ان دونوں عدالتوں نے کم و بیش یکساں بنیادوں پر نئے صدارتی حکم نامے کو بھی امریکی قانون اور آئین کے خلاف قرار دیتے ہوئے اس پر عمل درآمد روکنے کے احکامات جاری کیے تھے۔

واضع رہے کہ صدر ٹرمپ نے ان عدالتی فیصلوں پر شدید ردِ عمل کا اظہار کرتے ہوئے انہیں امریکی عدلیہ کی ’ سنگین غلطی ‘ قرار دیا تھا جبکہ ترجمان وائٹ ہاؤس شون اسپائسر نے بھی جمعرات کے روز ایک پریس بریفنگ میں واضح کیاتھا کہ عدالتی فیصے کو چیلنج کیا جائے گا ۔

یاد رہے کہ اس سے قبل امریکی صدر نے سفری پابندیوں سے متعلق جو حکم جاری کیئے تھے عدالت نے انھیں قانون سے مترادف قرار دے کر منسوح کر دیا تا تاہم اب ٹرمپ انتظامیہ نے عدالتی فیصلوں کو باقائدہ چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *